اخوت،امن،محبّت اور رواداری ہی کے ذریعے ملک کے وقار اور سالمیت کو بہتر بنایا جا سکتا ہے: شاکر شیخ (سیکریڑی جماعت اسلامی ہند ممبئی)

جماعت اسلامی ہند ممبئی کے مختلف علاقوں میں دعوتی افطار کا اہتمام، دعوت افطار نشست کے ذریعے امن و امان، بھائی چارہ اور رواداری کا پیغام دینے کی کی جا رہی ہے کوشش

پچھلے کچھ سالوں سے ملک کا ماحول نفرت انگیز و اشتعال کی طرف گامزن کرنے کی کوشش کی جارہی ہے۔ایسے میں ہر وہ شہری جو امن، سلامتی اور محبّت سے زندگی بسر کرنا چاہتا ہے وہ یہ کوشش کرے کہ کیسے اس نفرت کے ماحول کو پُر امن فضا سے ہمکنار کیا جائے۔ لہٰذا اجتماعی سطح پر جماعت اسلامی ہند ایسی نشستوں کا اہتمام کرتی ہے جس سے ملک میں شانتی اور آپس میں بھائی چارہ پیدا ہو سکے۔
ممبئی کی سطح پر کرلا اور بھانڈوپ مقامات پر برادرانِ وطن کے ساتھ اجتماعی افطار کا اہتمام با لترتیب 17 اپریل اور 19 اپریل کو کیا گیا۔ کُرلا میں ونوبھا بھاوے نگر اور بھانڈپ میں شریرام نگر میں یہ افطار منعقد کی گئی۔ افطار کا مقصد آپس میں پھیلائی گئی غلط فہمیوں کے متعلق گفتگو کرکے اُسےدور کرنا تھا۔ دونوں نشستوں میں شرکا کے ساتھ سیر حاصل ڈسکشن کیا گیا۔ اس دوران مذہب کی بنیادی باتوں اور تعلیمات پر تبادلہ خیال ہوا۔تمام نے اس بات پر اتفاق کیا کہ بحیثیت انسان یہ ہم سب کی ذمے داری ہے کہ ایک دوسرے کو راحت اور تحفّظ فراہم کرنے کی کوشش ہو۔ نشستوں میں پولیس اہلکار، سماجی کارکنان،مختلف طبقات کے لوگ، خواتین اور دیگر موجود رہے۔ تمام نے جماعت اسلامی ہند کی اس اہم کوشش کو بہت سراہا ۔ ساتھ ہی ساتھ اصرار کیا کہ مستقبل میں بھی ایسی نشستیں جن سے سماج کو صحیح رخ پر لے جانے میں مدد مل سکے، ملک ترقی کی راہ پر گامزن ہو سکے اُس کا باقاعدگی سے انعقاد کیا جائے۔
کُرلا کے امیرِ مقامی عرفان شیخ اور بهانڈپ کے امیرِ مقامی شاکر شیخ کے ہاتھوں شرکا کو تحفتاً کتابیں اور قرآن مجید کا مراٹھی ترجمہ مصحف بھی دیا گیا۔

جماعت اسلامی ہند ممبئی شہر