اعتکاف وشب قدر کی اہمیت و فضیلت

رمضان المبارک کے روزے کو اسلام کے ارکان خمسہ میں بہت ھی اہمیت اور بلند مقام حاصل ھے
رمضان المبارک ھی کی راتوں میں سے ایک رات شب قدر کہلاتی ھے جو بہت ھی فضیلت اور خیر وبرکت والی رات ھے ۔
قرآن مجید میں اس کو ہزار مہینوں سے افضل کھا گیا ھے ۔
اس رات کی خوبیوں کو اجاگر کرنے اس مقدس رات کی اہمیت اور برکت کو سمجھانے کیلئے باری تعالٰی پوری ایک سورہ قرآن مجید میں نازل فرمائی ھے ۔
حضرت ابی ھریرہ رضی اللہ تعالیٰ عنہ سے روایت ھے جس شخص نے ایمان کیساتھ اور ثواب کی نیت سے شب قدر کا قیام کیا اس تمام پچھلے گناہ معاف کر دیے جاتے ہیں
رمضان المبارک کے تین عشرے ھیں ۔۔پہلا عشرہ رحمت کا ھے ۔۔دوسرا عشرہ مغفرت کا ھے ۔۔تیسرا عشرہ جہنم سے آزادی کا ھے۔۔
اور اس اخیر عشرے میں اعتکاف کا بھی ذکر موجود ھے ۔
حضرت ابی ھریرہ رضی اللہ تعالیٰ عنہ سے روایت ہے۔مسجدوں کیلئے کچھ کھونٹے ھیں یعنی ایسے لوگ جو مسجدوں میں بیٹھے رہنا اور عبادت میں مشغول رہنا پسند کرتے ہیں۔۔ایسے لوگوں کے ساتھی فرشتے ھوتے ھیں اگر وہ مسجد میں موجود نہ ھوں تو وہ یعنی فرشتے انہیں تلاش کرتے ھیں ۔۔اور اگر بیمار ھوں تو انکی عیادت کرتے ہیں۔اور اگر ان کو کوئی حاجت درپیش ھو تو وہ اس کے پورا کرنے میں مدد کرتے ھیں ۔
دوسری حدیث میں ھے ۔معتکف گنا ھوں سے محفوظ رہتا ھے ۔اور اس کیلئے نیکیاں اتنی لکھی جاتی ھیں جتنی کے کرنیوالے کیلیے۔
چونکہ معتکف تمام برائیوں سے اپنے آپ کو محفوظ رکھتا ھے ۔
اللہ ربّ العزت ہمیں روزہ نماز تراویح قیام اللیل فرائض و واجبات سنن نوافل اعتکاف اور مستحبات پر عمل کرنے کی توفیق نصیب فرمائے اور رمضان کے علاوہ پوری سال ان باتوں پر مزید عمل کی توفیق نصیب فرمائے۔آمین

ناصر قاسمی مدنی منزل
رکن جمعیت علماء سرائے میر اعظم گڑھ